66.29.132.4 United States

12-Oct-2021

Wrong Number

by admin

رانگ نمبر
علی انجم ویسر
اپنا شیوا ہے کہ اندھیروں میں جلاتے ہیں چراغ
ان کی سازش ہے کہ یوں ہی رات رہے
کسی دانشور کا قول ہے کہ ماضی کا صحافی انتہائی غریب تھا اور صحافت طاقتور تھی ۔پر آج کا صحافی کافی امیر ہے اور صحافت کمزور ہو چکی ہے اس کا حاص سبب ہے گٹکا فروش منشیات فروش اور جوا کے اڈے چلانے والے صحافت جیسے عظیم پیشہ میں گھس آئے ہیں ہمیں اپنی صفیں اتنی مضبوط کرنی ہیں کہ کسی بھی گناہ گار اور گناہ پالنے والے کو ہمت ہی نہ ہو کہ کوئی مجرم منشیات فروش گٹکا فروش سوچ ہی نہ سکے کہ میں صحافت جیسے مقدس شعبے میں داخل ہو سکتا ہو ہمیں اپنے تعلقات اور دوستوں سے ہٹ کر سوچنا ہو گا ۔ان لوگوں کو مخالفت کے میدان میں لانا ہوگا ۔پہلے ایسے ہوتا تھا. اچھی سوچ اور اچھا نظریہ رکھنے والے لوگ صحافت میں آتے تھے ۔اس کی وجہ سے صحافت طاقتور تھی ۔اب صحافت اس لئے بد نام ہو رہی ہے تو اس کا سبب یہ ہے کہ آج صحافت میں مجرم جواری اور گٹکا فروش صحافت میں آ رہے ہیں ۔جس کی وجہ سے صحافت کمزور ہے ۔جس کی وجہ سے صحافیوں کو بہت کچھ سننا پڑتا ہے ۔اس لئے جو لوگ صحافت کو مضبوط اور مثبت دیکھنا چاہتے ہیں تو ہمیں ان مجرموں گٹکا فروشوں منشیات فروشوں کا راستہ روکنا ہو گا۔اور اس کے ساتھ ساتھ ان کو چاہئے کہ صحافت میں ان لوگوں کو لے کر آئیں جن کے دل میں دھرتی انسانیت کا درد ہو ۔جو صحافت کو مضبوط کرنے میں اہم کردار ادا کرے گا اور ایسے لوگوں کو گلے سے پکڑ کر یہ کہنا پڑے گا تم مجرم ہو ۔تم گٹکا فروش ہو تم جواری ہو ۔اس لئے ہماری صفوں میں تمہاری کوئی جگہ نہیں ۔کڑوا سچ بولنے کے علاوہ گریبان سے پکڑنے کے علاوہ اب کام نہیں چلے گا ۔ایسے لوگوں کے راستے بند کیے جائے ۔اگر ایسا نہیں کیا تو صحافت جیسا مقدس پیشہ بدنام اور خوار ہو جائے گا ۔جن مجرم لوگوں نے پورے دھیان سے صحافت کی طرف رخ کیا ہے ۔آنے والے کل میں صحافت میں نیک نیت صحافی کو کیا صحافت کا نام لینے والا بھی کوئی نہیں ہوگا ۔اور نہ صحافت پر کسی کا یقین ہوگا اور یہ صحافت منشیات فروش جرائم پیشہ اور جواریوں کے حوالے ہو جاۓ گی اور ایسے لوگوں کی حوصلہ شکنی کر کے پروفیشنل صحافیوں کو آ گے لانے کے لئے ان مجرموں کو صحافت سے دور کرنا ہو گا تو کسی کو جرات نہیں ہوگی کہ کوئی ہماری انصاف پر مبنی صحافت جیسے مقدس پیشے کو کوئی بدنام کرسکے

 

English Translate

 

Wrong Number
Ali Anjum Weisser
It is our Shiva who lights the lamp in the darkness
Their conspiracy is to stay the night
Some intellectuals say that the journalist of the past was very poor and journalism was powerful. But today’s journalist is very rich and journalism has become weak. The main reason for this is in a great profession like Gatka seller, drug dealer and gambling operator. We have to strengthen our ranks so that no sinner and sinner will dare to think that no criminal drug dealer, Gutka seller can think that I can enter the sacred field of journalism. You have to think differently from your friends. You have to bring these people into the arena of opposition. It used to be like this. People with good thinking and good ideology used to come to journalism. Because of this, journalism was powerful. Now journalism is becoming infamous because of this. Because of which journalism is weak. Because of which journalists have to listen a lot. Therefore, those who want to see journalism as strong and positive, then we have to stop the way of these criminals, gatka sellers and drug dealers. At the same time, they should bring in journalism those who have the pain of humanity in their hearts, who will play an important role in strengthening journalism, and embrace such people and say that you are guilty You are a gutka seller, you are a gambler. Therefore, you have no place in our ranks. Apart from telling the bitter truth, it will not work except to grab him by the collar. The way of such people should be blocked. The sacred profession will be disgraced and disgraced. The criminals who have turned their attention to journalism. In the future, no one will take the name of journalism to a well-meaning journalist. And no one will believe in journalism and this journalism will be handed over to drug dealers, criminals and gamblers and in order to discourage such people and bring professional journalists forward, these criminals will have to be removed from journalism. So no one would dare to discredit our sacred profession like journalism based on justice

Related Posts

Leave a Comment

Translate »